Circle Image

Wajiha Rauf

@wajiharauf

سناورعباس

پریشاں ہوں تو اسی کی بس بات کے لیے
اداسی کے شہر میں ملاقات کے لیے
ستاروں سے روشنی دبے پاؤں ہٹ گئی
زمانے میں عشق کرتے مہتاب کے لیے
محبت سے بات گر اسی نے کی ہوتی تو
نہ رہتا میں چپ کبھی فقط رات کے لیے

0
9
میں ہوں عشقِ مستانہ
میں ہجرِ ہوں نذرانہ
میں ہوں عشقِ تشنہ تو
پر چپ ہیں یہ لب جانا
آ تیری صورت دیکھوں
کرتا ہوں میں شکرانہ

0
9
سوچ کر رو دیتا ہوں میں
اب کہاں رو دیتا ہوں میں
عشق تیری ذات ایسی
دیکھ کر رو دیتا ہوں میں
اب فقط تم یاد ہو گی
جان کر رو دیتا ہوں میں

0
9
یہ الفت یہ چاہت بہت دیر تک
رہی اس کی راحت بہت دیر تک
ستاروں میں مہتاب بھی چھپ گیا
رہی جب نزاکت بہت دیر تک
مرے دل میں طوفان برپا ہوا تب
رہی جب شرافت بہت دیر تک

0
8
چشمِ نم سے تیری غزلیں گاتا ہوں میں
جب کسی محفل میں تنہا جاتا ہوں میں
ْلوگ جب مجھ کو ترا عاشق کہیں تو
جھوٹ کہتا ہوں قسم جب لیتا ہوں میں
کون ہے اپنا یہاں اب ہوش آیا
یادکرنا اب کہاں َخوش رہتا ہوں میں

0
9
زمینِ دل کو ترے نام کر کے
چلا ہوں زندگی تمام کر کے
سپرد خاک ہونے جا رہا ہوں
وجود کو ترا غلام کر کے،
شب و سحر گزارے میکدے میں
تجھے اپنے لیے حرام کر کے،

0
9
زمانے سے مجھے حیرانی بہت ہے
بشر رہتے ہیں پر حیوانی بہت ہے
حیا پر گفتگو کرتے دیکھتے ہیں
مگر دل کا کیا جو شیطانی بہت ہے
درندوں کے جہاں میں اور کچھ نہیں ہے
یہاں الفت میں سرگردانی بہت ہے

0
15