Circle Image

Khurram Jawad

@QunootKhurram

سمجھ لو محبت کرو گے، مرو گے
مسلسل اگر جو ڈرو گے، مرو گے
نشیلی بہت ہے صنم کی ادا پر
بہک جو گئے تو ادا سے مرو گے
سلیقہ اسے ہے دلوں کو چرا لے
سنو دل بچانا، نہیں تو مرو گے

0
2
سنو تم خفا بھی نہیں ہو جدا ہو
کہاں سے بشر ہو کہاں کے خدا ہو
بڑا ہے سمندر ڈرے تو نہیں ہم
بہے گا سفینہ خدا کی رضا ہو
خرم جواد

0
10
سلیقہ اب نہیں مجھ میں سوالوں کا جوابوں کا
گزر جانا گلی سے بھی ضروری ہے خرابوں کا
کتابیں تو ابھی بھی کچھ ادھوری ہیں زمانوں سے
زمانہ ہی نہیں چلتا کبھی میرے نصابوں کا
ذرا پت جھڑ اترنے کی پڑی ہے رت بکھرنے دو
بہت جلدی ابھی موسم چلے گا پھر گلابوں کا

0
7
محبت کے اصولوں پر صداقت سے اگر چلتے
دغا خود سے نہیں کرتے محبت سے اگر چلتے
بدلتے ہیں سبھی موسم سدا اک رت نہیں رہتی
کبھی رسوا نہیں ہوتے شرافت سے اگر چلتے
نمی ساحل تلک بھی ہے سمندر کے ذخیروں کی
کبھی قدموں تلے پانی ابلتا تھا اگر چلتے

0
3
ملاقاتیں سبھی اپنی مسلسل ہی ختم کر کے
چلے ہو تم جگر پر اب تشدد سا رقم کر کے
سلا دینا اگر جذبے محبت کے جگے دل میں
نبھانی ہے مجھے ہر پل محبت کی قسم کر کے

0
7
محبت کے اصولوں پر صداقت سے اگر چلتے
دغا خود سے نہیں کرتے محبت سے اگر چلتے
بدلتے ہیں سبھی موسم سدا اک رت نہیں رہتی
کبھی رسوا نہیں ہوتے شرافت سے اگر چلتے
خرم جواد

0
7
ساحلوں پر چلے بادلوں سے بہے
پانیوں کا سفر کب رکے کب تھمے
صورتیں رنگتیں سب مجھے جچ گئیں
اک مگر وہ صنم دل ربا ہی رہے
خرم جواد

0
12