Circle Image

راجہ حارث دھنیال

@Raja.haris01

کوئی اپنے نہ آس پاس ہے سائیں
دل ہمارا اداس ہے سائیں
پہلے ہر ایک یار تھا اپنا
لیکن اب اقتباس ہے سائیں
میرے زخموں کو یوں کھریدیں مت
آپ سے التماس ہے سائیں

17
چھپ کہ دنیا سے آہ بھرتے ہیں
رات دن تجھ کو یاد کرتے ہیں
کیا تکلف کریں یہ کہنے میں
ہم تری سادگی پہ مرتے ہیں
کوئی اپنا یہاں عزیز نہیں
کس کی خاطر جہاں سے لڑتے ہیں

0
1
26
چھپ کہ دنیا سے آہ بھرتے ہیں
رات دن تجھ کو یاد کرتے ہیں
کیا تکلف کریں یہ کہنے میں
ہم تری سادگی پہ مرتے ہیں
کوئی اپنا یہاں عزیز نہیں
کس کی خاطر جہاں سے لڑتے ہیں

0
11
کچھ اگر پیار میں کرتے تو بھلا کیا کرتے
جو ہمیں مل نہ سکا اس کا گلا کیا کرتے
زندگی رب کی امانت ہے مگر ہجر کی رات
ہم خیانت نہیں کرتے تو بتا کیا کرتے
راجہ حارث دھنیال

20
دکھ خزانہ ملا ہے اپنو سے
اس کو یوں رائیگاں نہ جانے دے
اپنے آنسو سنبھال کر جاناں
غم ہنسی میں مجھے چھپانے دے
راجہ حارث دھنیال

0
13
مفاعیلن مفاعیلن فعولن
سنو مجھ سے جسارت ہو گئی ہے
مجھے تم سے محبت ہو گئی ہے
تمارا ساتھ اس درجہ حسیں ہے
مجھے اب اس کی عادت ہو گئی ہے
کبھی جو آسرا بنتی تھی میرا

0
33
فرازِ عرش کا تارا حسین ابن علی
نبی کا راج دلارا حسین ابن علی
نبی کی لاڈلی دختر کا لاڈلا بیٹا
حسن کی آنکھ کا تارا حسین ابن علی
یہ مشکلوں نے مجھے گھیر ہی لیا تھا مگر
تمہارے نام نے تارا حسین ابن علی

32