Circle Image

Shah Meer Khan

@SmkBhagalpuria0003

بیچھڑ کے تم سے رویا تو بہت ہوں ہاں چین سے تب سویا تو بہت ہوں

وہ جھوٹی تعریف کے قصے ختم نہیں ہوتے
بے حد شیریں لوگ بھی یار ہضم نہیں ہوتے
دائیں بائیں کا جو فرشتہ ہے لکھ رہا ہے سب
اور ہم سمجھے ہیں یہ گناہ رقم نہیں ہوتے
جانو بابو کی ہے صدی ہے پریم بھی وقتی
اب اے جی او جی لو سنو جی صنم نہیں ہوتے

1
45
سچے بھی جھوٹے بھی یہ رشتے بنانے کے لیے
جان لگتی ہے میاں اُن کو نبھانے کے لیے
مے بھی کیا شہ ہے تری یاد بڑھا دیتی ہے
جبکہ پیتے ہیں تری یاد بھلانے کے لیے
حالِ دل تم تو یہ صورت سے سمجھ سکتی تھیں
میرے لب ہنس پڑے تھے یار زمانے کے لیے

11
تیرے وعدوں کا زہر قطرے قطرے
پیتے ہیں شام و سحر قطرے قطرے
لیتے ہیں جان میری قطرے قطرے
ڈھاتے ہیں دل پہ قہر قطرے قطرے
اب کے ممکن نہیں ہے بچنا شاید
روحوں جسموں کا ہجر قطرے قطرے

2
76
تم کو اچھا نہیں لگتا ہوں میں
دل کا سچا نہیں لگتا ہوں میں
میر و غالب تھے سخنور اچھے
ویسے بونا نہیں لگتا ہوں میں
جھانکو تو دوستوں دل کے اندر
دل سے روکھا نہیں لگتا ہوں میں

36