Circle Image

Manzar Abbas

@Manzar

بحرِ ظلمت میں نیا باب بنا جاؤں گا
اپنے سینے کے سبھی راز بتا جاؤں گا
گھپ اندھیرے سے نہ تم ڈرنا پرندو ! اب مَیں
خود بجھا بھی تو نیا دیپ جلا جاؤں گا
مَیں تو شاعر ہوں مرا کام فقط ہے اتنا
اَن سنے گیت فلسطیں کے سنا جاؤں گا

0
11
حسینؑ چل پڑے تھے یوں مدینے سے
اُتر رہی ہو جیسے شام زینے سے
حسینؑ ہیں، حسنؑ نہ فاطمہؑ و علیؑ
نظر نہیں وہ آتے اب نگینے سے
کجا حسینؑ جو بقائے بو البشر
کجا امیہ کے وہ قرد کمینے سے

0
16
لفظوں میں چاہت کا رس گھولتے ہیں
آؤ ! ہم مل کر اُردو بولتے ہیں

0
11
آنچ سے تیرے ادب کی خوشبو نہیں آتی
یعنی پھر سمجھوں کہ تمہیں اُردو نہیں آتی

0
8