چہرہ ہی عنواں جیسا صاف رہے
بندہ ہی اپنے سے معروف رہے
دنیا ہے ساری اک میدان عمل
مقصد پر ہی ہم پورے وقف رہے

0
23