تو غم نہ کر بارِ ارتقا میں جہاں کہیں بھی اتار لوں گا
دو چار دن ہیں کسی طرح بھی بغیر تیرے گزار لوں گا

0
50