ملنا ملانا خوب مشکل سا مگر
مجبور سے ہوں تو کٹھن کتنا مگر
جب دوریاں پہلے ہی تھیں موجود تو
کیا پوچھنا پھر حال اب اس کا مگر
بڑھتی محبت ہے تحا ئف سے بے حد
اظہار کا کوئی طریقہ سا مگر
بدلہ صلہ رحمی کا ملتا کل جہاں
برکت، درازی عمر کو پاتا مگر
بخشش عطا بھی کر سکے کچھ نیکیاں
رحمت خداوندی دیکھے حیلہ مگر
ادنیٰ عمل ناصر بہانہ بن سکے
کس دین سے مالک بھی لوٹاتا مگر

0
32