فلک سے کر رہے ہو کیوں تماشہ اے مِرے پرور
اُتر کے دیکھ یہ کھیل آپ نے ہی تو رچایا ہے

0
19