امت کے غم میں کیسے سدا آپؐ گھلتے تھے
یا امتی یا امتی ہی لب بھی کہتے تھے
اصحاب خالی تین سو تیرہ ہی ساتھ تھے
پیشانی غزوہ بدر میں بہ سجدہ رکھتے تھے
خندق کے غزوہ میں کئی دن فاقہ بھی ہوا
پتھر بندھے ہوئے جو شکم پر بھی رہتے تھے
پرواہ مرض کی نہ رہی تھی حضورؐ کو
غزوہ تبوک میں پہ لُو گرمی ہی سہتے تھے
خطبہ وداع میں دیا ناصؔر جو وعظ تھا
تبلیغ سے لگاؤ کے ہی سارے نکتےتھے

0
19