لاکھوں لوگوں کی محنت کا یکتہ ثمر ہے مرا پاکستان
افزائش ہوئی جس کی لہو سے ایسا شجر ہے مرا پاکستان
آئے دشمن تیرے سبھی سپنے مٹی میں مل جائیں گے
یہ رہے گا رہتی دنیا تک ایسا امر ہے مرا پاکستان
چاند ستارے تو ہیں ہر سوں لیکن ان میں خوبرو کوں ہے
سورج ہے جس پر نازاں اک ایسا قمر ہے مرا پاکستان
مت کر اس کی سرحد کا تعین ان عارضی لکیروں سے
جس جگہ بھی ہے کوئی مسلماں ادھر ہے میرا پاکستان
ہیں یکجا اس نقطہ پر توحید کے سبھی ماننے والے
آج بھی مسلم دنیا کی ایٹمی کمر ہے مرا پاکستان
لاتعداد جگر گوشوں نے ہیں سر کٹائے اسکی خاطر
ماؤں بیٹیوں کی ہی دعاؤں کا یہ اثر ہے مرا پاکستان
پھر عطا ہوتی چلی گئی اس پر رب کی ہر طرح سے یکساں
میدانوں ،کوہساروں کا اک سوھنا نگر ہے مرا پاکستان
پوچھتے ہو نہ کہ آخر کیا ہے وطن یہ امین بارقِ کےلیے
میرا شجرہ نسب، نَصْبُ الْعَین میرا فخر ہے مرا پاکستان

0
9