اس شخص کے افسانے سناؤ نا کچھ تم
کیوں مر میَں مٹا وجۂ غَدر پوچھ رہا ہوں
میں خود بھی تو احسنِ تقویم ہوں تو پھر
وہ کون ہے میں جس کی خبر پوچھ رہا ہوں

0
7