یہ مری سوچ سے آگے ہیں مرے ساتھ نہیں
خطرہ پاتے ہی جو بھاگے ہیں مرے ساتھ نہیں
ہم تو جاگے ہیں کہ خطروں سے تھا لڑنا اک دن
بھاگ جن کے نہیں جاگے ہیں مرے ساتھ نہیں
لوگ احساس کی بھٹی میں بھی کندن نہ ہوئے
کیسے الجھے ہوئے دھاگے ہیں مرے ساتھ نہیں
یوں تو احباب ہیں مدت سے مرے ہم آواز
کوئی پیچھے کوئی آگے ہیں مرے ساتھ نہیں

0
39