?عشقِ کشمیر میرا سہرا ہے ?


مذہبی نفرتوں کا چہرہ ہے

عشقِ کشمیر میرا سہرا ہے


زندگی بین ، موت رقص کرے

دنیا اس بے بسی پہ کان دھرے


موت بس خون کی ہوس میں ہے

زندگی موت کی قفس میں ہے


ہے قیامت قریب وادی کے

آہ مولا نصیب وادی کے


صبر کی کوئی حد وہاں دیکھے

ظلم ہی ظلم ہے جہاں دیکھے

ریاض حازم


0
1
73
یہ نظم عشقِ کشمیر میرا سہرا ہے

0