کس شدت سے کھینچتی ہے اپنی اور
میرا یہ عشق ہے رواں تیری اور
یہ چاہت کی نشانی ہی ہے فاؔنی
ہر سو مشکل یہ رستے ہیں میری اور

2