شعری مجموعہ اجمال

16 جولائی 2017

ہم ڈوب گئے نغمی اشکوں کے بھنور میں
ہم موسمے برسات کا شکوہ نہیں کرتے
ہم گردشے حالات کا شکوہ نہیں کرتے
ہم آج کسی بات کا شکوہ نہیں کرتے
اشعار کی تقطیع
تبصرے