میری شاعری

آپ کی شائع شدہ شاعری

اس سیکشن میں اپنی شاعری کیسے شائع کریں؟

اطلاع: اس سیکشن کو کچھ عرصے میں ختم کیا جا رہا ہے۔ اس سیکشن میں مزید شاعری شائع نہیں ہو سکے گی۔ ہماری جانب سے معذرت۔ انتظامیہ

#موزوں سادہ

3 مئی 2016


جتنے سادہ ہوں الفاظ
روح میں سمائیں گے
پائیں گے اجر وہ قول
جو عمل میں آئیں گے
#موزوں دَغا کیا ہے دعا کیا ہے؟ ہتھیلی پر سجا کیا ہے؟

2 مئی 2016


دَغا کیا ہے دعا کیا ہے؟
ہتھیلی پر سجا کیا ہے؟
میں اک عرصے سے انجاں ہوں
محبت کا عصا کیا ہے؟
مزید دکھائیں
#موزوں ۔۔۔ غزل ۔۔۔

2 مئی 2016


کوئی بچوں کی شرارت کی شکایت نہ کرے
کیسے ممکن ہے کوئی بچہ شرارت نہ کرے
تتلیاں کھیلنے آتیں نہیں اب گلشن میں
مالی خائن ہے اسے کہہ دو خیانت نہ کرے
مزید دکھائیں
#موزوں دعا

2 مئی 2016


یا رب دل مضطرب میں شمع وحدت کی جلا دے
مجھے دیوانگی میں سرفروشی تو سکھادے
تجلی نور کے اسلوب کی رغبت کہاں ہے
تو وعدہ وصل ہم سے روز محشر میں نبھا دے
#موزوں ؑشق

2 مئی 2016


ہمارے دِن گُذرتے ہیں طوافِ آرزو کرتے
بِگاڑے قافیے اپنے تُمہاری جُستجُو کرتے
انا داری کی لہروں کو ہوا سرکش بنا دیتی
تمنّا وں کے دریا کے کنارے رُو برُو کرتے
مزید دکھائیں
#موزوں غزل

2 مئی 2016


دل کی ہر ایک تمنا کو بکھرتے دیکھا
ہم نے اس کو جو محبّت سے مکرتے دیکھا
جو کبھی چین سے جینے ہی نہیں دیتے ہیں
دل پہ ایسے بھی عذابوں کو اترتے دیکھا
مزید دکھائیں
#موزوں رباعی

2 مئی 2016


وہ مجھے دے کے جفا مجھ سے وفا لیتا ہے
کتنا چالاک ہے کیا دیتا ہے کیا لیتا ہے
لوگ پردے کے بھی عیبوں کو بتا دیتے ہیں
اور خدا ہے جو کھلے عیب چھپا لیتا ہے
#موزوں غزل

1 مئی 2016


وہ مجھے یاد کرے اب یہ ضروری تو نہیں
باغ دل میں کھلے گل پھر یہ ضروری تو نہیں
رنج جاناں کے شراروں سے جلے جب تن من
اشکوں سے آگ بجھا ؤں یہ ضروری تو نہیں
مزید دکھائیں
#موزوں غزل

1 مئی 2016


وہ مجھے یاد کرے اب، یہ ضروری تو نہیں
باغ دل میں کھلے گل پھر ، یہ ضروری تو نہیں
رنج جاناں کے شراروں سے جلے جب تن من
اشکوں سے آگ بجھا ؤں یہ ضروری تو نہیں
مزید دکھائیں
#موزوں محبت کا تری ہم کو یقیں تھوڑا گماں تھوڑا

1 مئی 2016


محبت پر تری ہم کو یقیں تھوڑا گماں تھوڑا
تذبذب کے ہی عالم میں کہیں ہوں بدگماں تھوڑا
ادھر اترا ادھر اترا یہاں چھوڑا وہاں چھوڑا
محلہ چھوڑا گلی چھوڑی دل توڑا مکاں چھوڑا
مزید دکھائیں
#موزوں نظر میں پھر سے وہی لوگ جگمگانے لگے

1 مئی 2016


نظر میں پھر سے وہی لوگ جگمگانے لگے
جنہیں بھلانے میں ہم کو کئی زمانے لگے
مرے ندیم کسی اور کے ہوئے ہیں تو کیا
چلو کسی سے تعلق تو وہ نبھانے لگے
مزید دکھائیں
#موزوں طرحی غزل

1 مئی 2016


محبت پر تری ہم کو یقیں تھوڑا گماں تھوڑا
تذبذب کے ہی عالم میں کہیں ہوں بدگماں تھوڑا
میں رستے میں ہوں برسوں سے تری چایت میں ڈوبا یار
تو آہستہ زرا چل میرے لمحہ بے اماں تھوڑا
مزید دکھائیں
#موزوں غزل

30 اپریل 2016


سچ بولنے کی مجھ کو یہ کیسی سزا دیا
میری زباں پہ فوج کا پہرہ لگا دیا
قاتل امیر شہر تھا پاتا وہ کیوں سزا
پیسوں کے بل پہ عدل کا پرچم جلا دیا
مزید دکھائیں
#موزوں یوم مزدور

30 اپریل 2016


بھوک کے پیاس کے خطرات سے ڈر جاتا ہے
مار کے اپنے ہی بچوں کو وہ مر جاتا ہے
ہر طرف اس کی ہی محنت کے مظاہر ہیں مگر
بھوک کے ہاتھ سے مزدور بکھر جاتا ہے
#موزوں غزل

30 اپریل 2016


عشق سوکھا ہوا شجر تو نہیں
یہ ریاضت بھی بے ثمر تو نہیں
یہ کبوتر کہاں سے آیا ہے
اسکو دیکھو یہ نامہ بر تو نہیں
مزید دکھائیں
#موزوں یزید وہ ہے جو بچے شہید کرتا ہے

30 اپریل 2016


پھر اسکی بیخ کنی بھی تو لازمی ٹھیری
جو آئے روز ستم یاں جدید کرتا ہے
یہ کربلا و پشاور سے طے ہوا احقر
یزید وہ ہے جو بچے شہید کرتا ہے
#موزوں غمِ دنیا بھی غمِ یار میں ضم جانتا ہے

30 اپریل 2016


غمِ دنیا بھی غمِ یار میں ضم جانتا ہے
جو خدوخالِ محبت کو بہم جانتا ہے
تجھ سے ہرگز نہ کہے یہ کہ وفادار ہے تو
وہ جو اک شخص ترے قول و قسم جانتا ہے
مزید دکھائیں
#موزوں غزل

30 اپریل 2016


نفرت کے اس جہان میں الفت کا راستہ
میں ڈھونڈتا رہا ہوں قرابت کا راستہ
پیسے دیے ہیں رب نے تو پھر خرچ کیجیے
عزت کا راستہ ہے سخاوت کا راستہ
مزید دکھائیں