میری شاعری

آپ کی شائع شدہ شاعری

اس سیکشن میں اپنی شاعری کیسے شائع کریں؟

#موزوں فیصلہ

7 نومبر 2014


ہوتا نہیں ہے خود سے محبت کا فیصلہ
یہ تو قسم خدا کی ہے قسمت کا فیصلہ
اک دوسرے کی خواہشیں ہوتی ہیں محترم
بس اس طرح سے ہوتا ہے چاہت کا فیصلہ
مزید دکھائیں
#موزوں میرے اشعار زندہ ہیں

7 نومبر 2014


اب بارِ عاشقی بھی اٹھانا بہت ہوا
آنکھوں میں رت جگوں کو سجانا بہت ہوا
#موزوں میرے اشعار زندہ ہیں

7 نومبر 2014


اب بارِ عاشقی بھی اٹھانا بہت ہوا
آنکھوں میں رت جگوں کو سجانا بہت ہوا
#موزوں غزل

7 نومبر 2014


درد کو بانٹنے میں نکلی تھی
آپ کو ہارنے میں نکلی تھی
آ گئی چاند رات رستے میں
ظلمتیں پالنے میں نکلی تھی
مزید دکھائیں
#موزوں غزل---مجھ کو پتھر کر دیا برفاب نے

7 نومبر 2014


مجھ کو پتھّر کر دیا برفاب نے
خواب اخگر کر دیا برفاب نے
چھین کر مجھ سے محبت کی نمو
پھر مسخرّ کر دیا برفاب نے
مزید دکھائیں
#موزوں فیصلہ

6 نومبر 2014


ہوتا نہیں ہے خود سے محبت کا فیصلہ
یہ تو قسم خدا کی ہے قسمت کا فیصلہ
اک دوسرے کی خواہشیں ہوتی ہیں محترم
بس اس طرح سے ہوتا ہے چاہت کا فیصلہ
مزید دکھائیں
#موزوں غزل...میں تو خود کو تھی ڈھونڈنے نکلی÷ آ گئی کائنات مُٹھی میں

6 نومبر 2014


میں تو خود کو تھی ڈھونڈنے نکلی
آ گئی کائنات مُٹھی میں
میں نے جب بھی نفی نفی بولا
مسکرایا ثبات مُٹھی میں
مزید دکھائیں
#موزوں کبھی لیلیٰ ، کبھی ہیر

5 نومبر 2014


ہر طرف آپ کی تصویر نظر آتی ہے
اک حسیں خواب کی تعبیر نظر آتی ہے
سرخ ہونٹوں کے تبسم پہ میں ہو جاؤں فدا
صاف یہ پیار کی تحریر نظر آتی ہے
مزید دکھائیں
#موزوں سلام کرنا، حسین لکھنا

5 نومبر 2014


تری مودّت کا جام پی کر،سلام کرنا، حسینؑ لکھنا
لبوں پہ تشنہ لبی سجا کر، کلام کرنا ،حسینؑ لکھنا
مرے خیالوں میں بس چکی ہے تپش جو صحرائے کربلا کی
اُسی تمازت میں چشم ِنم کا قیام کرنا ،حسینؑ لکھنا
مزید دکھائیں
#موزوں غزل

4 نومبر 2014


اُکتا گیا تھا کیا مجھے وہ دیکھ دیکھ کر
فوٹو کو اُس نے میری جو ڈیلیٹ کر دیا
جو چومتا تھا فوٹو کو میری بے اختیار
حالات نے ہے شاید اُسے ڈھیٹ کر دیا
مزید دکھائیں
#موزوں فوٹو

4 نومبر 2014


اُکتا گیا تھا کیا مجھے وہ دیکھ دیکھ کر
فوٹو کو اُس نے میری جو ڈیلیٹ کر دیا
چوما تھا جس نے فوٹو کو میری ہزار بار
حالات نے ہے کیسا اُسے ڈھیٹ کر دیا
#موزوں غزل ۔۔۔گلہ تقدیر سے کیا ہو

4 نومبر 2014


نکلا جائے وقت ہر تدبیر سے
اب گلہ ہو بھی تو کیا تقدیر سے
خون کب تک زخم سے جاری رہے
لوگ مرہم رکھ چکے شمشیر سے
مزید دکھائیں
#موزوں غزل ''جاناں""

4 نومبر 2014


خواب میں روبرو تھا تُو جاناں
یا کوئی اور' ہو بہو 'جاناں
''تو'' تصور میں جب بھی آیا ہے
آنکھ کرنے لگی وضو جاناں
مزید دکھائیں
#موزوں غزل

3 نومبر 2014


مشتہر ہوا اتنا واقعہ محبّت کا
چھوڑنا پڑا ہم کو راستہ محبّت کا
کاش راز ہی رہتا ربط باہمی اپنا
جانے پھر کہاں جاتا سلسلہ محبّت کا
مزید دکھائیں
#موزوں شمع خدا

3 نومبر 2014


راہِ وفا پہ چلتے ہیں دیوانے آج بھی
شمعِ خدا کے کم نہیں پروانے آج بھی
دنیا بدل چکی نہیں بدلہ نظامِ عشق
لبریز کہنہ مےَ سے ہیں پیمانے آج بھی
#موزوں ایک شعر

2 نومبر 2014


ہم نے کیا جب پیار کا سودا قیمت کو نہیں دیکھا تھا
ہاتھوں میں تقدیر تھی اپنی قسمت کو نہیں دیکھا تھا
#موزوں تصویر

1 نومبر 2014


اکتا گیا وہ جب مجھے ہی دیکھ دیکھ کر
تواس نے میری فوٹو کو ڈیلیٹ کر دیا
جو چومتا تھا میری ہی تصویر بار بار
حالات نے ہے کتنا اسے ڈھیٹ کر دیا
#موزوں کلام سوز

1 نومبر 2014


ہم کو نہ مل پائی تری تابش حسن وائے نصیب
اب کچھ نہیں کرنا ہے ہم نے اس زمانے کو لے کر